دیگر ممالک

سوڈان میں مسلح تصادم ، 25 افراد ہلاک

سوڈانی فوج اور پیرا ملٹری ’’ سریع الحرکت فورسز‘‘ کے درمیان جھڑپوں میں درجنوں افراد زخمی اور ہلاک ہو چکے ہیں۔ یہ جھڑپیں البرھان اور دقلو کی جانب سے تنازعات کو بڑھاوا نہ دینے پر اتفاق کی خواہش کے اظہار کے باوجود شروع ہوگئیں۔

خرطوم: سوڈانی نیشنل آرمی اور ریپڈ سپورٹ فورسز (آر ایس ایف) کے درمیان جھڑپوں میں کم از کم 25 افراد ہلاک اور 183 دیگر زخمی ہوگئے رائٹرز نے یہ معلومات سوڈانی ڈاکٹروں کی یونین کے حوالے سے دی تاہم، رپورٹ میں بتایا گیا کہ یونین اس بات کا تعین نہیں کر سکی کہ آیا تمام ہلاکتیں عام شہری تھیں ہفتے کے روز، سوڈان کے سب سے زیادہ آبادی والے شہر أم درمان کے ایک اسپتال کے ڈائریکٹر نے اسپوتنک کو بتایا کہ آر ایس ایف اور فوج کے درمیان لڑائی میں چھ شہری مارے گئے۔

متعلقہ خبریں
پاکستانی سیاست میں فوج کا دبدبہ برقرار رہے گا: انوارالحق کاکڑ
ایرانی فورسس اور افغان طالبان کے مابین تنازعہ
امریکہ میں ہندوستانی طالبہ کار حادثہ میں شدید زخمی
اے پی وزیر کے قافلہ کی گاڑی سے ٹکر ایک شخص ہلاک
غزہ پر اسرائیلی بربریت میں اقوام متحدہ کے 9 ملازمین ہلاک

سرکاری فورسز نے آر ایس ایف پر بغاوت کا الزام لگایا اور ان کے ٹھکانوں پر فضائی حملے شروع کر دیے۔ آر ایس ایف نے خرطوم میں صدارتی محل اور خرطوم اور مروی کے ہوائی اڈوں کے کنٹرول کا دعویٰ کیا۔ نیشنل آرمی نے صدارتی محل پر قبضے کی تردید کی اور کہا کہ وہ خرطوم کے قریب آر ایس ایف کے ٹھکانوں پر بمباری کر رہی ہے۔

واضح رہے سوڈانی فوج اور پیرا ملٹری ’’ سریع الحرکت فورسز‘‘ کے درمیان جھڑپوں میں درجنوں افراد زخمی اور ہلاک ہو چکے ہیں۔ یہ جھڑپیں البرھان اور دقلو کی جانب سے تنازعات کو بڑھاوا نہ دینے پر اتفاق کی خواہش کے اظہار کے باوجود شروع ہوگئیں۔

دونوں فوجی دستوں کے درمیان تنازعات گزشتہ بدھ کو ’’مروی‘‘میں شروع ہوئے جب ریپڈ ایکشن فورسز نے تقریباً 100 فوجی گاڑیوں کو وہاں کے فوجی ایئر بیس کے قریب ایک مقام پر دھکیل دیا جس سے فوج مشتعل ہوگئی۔ فوج نے اس اقدام کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے سریع الحرکت فورسز کے انخلا پر زور دیا تھا۔

a3w
a3w