دہلی

دلیپ گھوش اور سپریہ شریناتے کو الیکشن کمیشن کی نوٹس

الیکشن کمیشن نے چہارشنبہ کے دن بی جے پی قائد دلیپ گھوش اور کانگریس قائد سپریہ شریناتے کو چیف منسٹر مغربی بنگال ممتا بنرجی اور کنگنا رناوت کے خلاف ان کے نامناسب ریمارکس پر نوٹس وجہ نمائی جاری کی۔

نئی دہلی: الیکشن کمیشن نے چہارشنبہ کے دن بی جے پی قائد دلیپ گھوش اور کانگریس قائد سپریہ شریناتے کو چیف منسٹر مغربی بنگال ممتا بنرجی اور کنگنا رناوت کے خلاف ان کے نامناسب ریمارکس پر نوٹس وجہ نمائی جاری کی۔

متعلقہ خبریں
کمیشن نے چامراج نگر سیٹ پر دیا دوبارہ پولنگ کا حکم
بھارت سیواشرم کے سادھو کارتک مہاراج نے ممتا کو ہتک عزت کا نوٹس بھیجا
مودی، گورنر کے ذریعہ لڑکی کے ساتھ جنسی زیادتی کئے جانے پر خاموش کیوں ہے؟: ممتا بنرجی
پولنگ کا تازہ تناسب الیکشن کمیشن پر ممتا بنرجی کی تنقید
یکساں سیول کوڈ سے ہندوؤں کا کوئی فائدہ نہیں ہوگا: ممتا بنرجی

کنگنا رناوت کو بی جے پی نے ہماچل پردیش کے حلقہ لوک سبھا منڈی سے میدان میں اتارا ہے۔

الیکشن کمیشن نے کہا کہ ان کے ریمارکس غیرمہذب ہیں۔ اس نے کہا کہ پہلی نظر میں دونوں کے ریمارکس سے مثالی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی ہوتی ہے۔

سیاسی جماعتوں کو مشورہ دیا جاتا ہے کہ وہ انتخابی مہم کے دوران وقار کو ملحوظ رکھیں۔ دونوں قائدین سے کہا گیا کہ وہ 29 مارچ کی شام تک نوٹس وجہ نمائی کا جواب داخل کریں۔