امریکہ و کینیڈا

پولیس نے فلسطین حامی مظاہروں کے درمیان نیویارک میں کولمبیا یونیورسٹی کی گھیرابندی کی

غزہ کی پٹی میں اسرائیل کی فوجی کارروائی کے خلاف فلسطینی حامیوں کے احتجاج کے درمیان امریکہ میں نیویارک سٹی پولیس ڈیپارٹمنٹ (این وائی پی ڈی) نے کولمبیا یونیورسٹی کو گھیرے میں لے لیا ہے۔

نیویارک: غزہ کی پٹی میں اسرائیل کی فوجی کارروائی کے خلاف فلسطینی حامیوں کے احتجاج کے درمیان امریکہ میں نیویارک سٹی پولیس ڈیپارٹمنٹ (این وائی پی ڈی) نے کولمبیا یونیورسٹی کو گھیرے میں لے لیا ہے۔

متعلقہ خبریں
غزہ میں پہلا روزہ، اسرائیل نے فلسطینیوں کو مسجد اقصیٰ میں داخل ہونے سے روک دیا
امریکہ میں ایک ماہ میں 4 ہندوستانی طالب علم ہلاک
وزیر خارجہ ملایشیا، فلسطین کو اقوام متحدہ کی رکنیت کی وکالت کریں گے
آندھرا پردیش کی میڈیکل طالبہ شیخ ظہیرہ ناز جاں بحق
اسرائیلی فائرنگ میں پانچ افراد فوت

میڈیا نے منگل کی دیر رات اطلاع دی کہ پولیس پہلے ہی یونیورسٹی کے علاقے میں داخل ہو چکی ہے۔ دریں اثنا، پولیس نے یونیورسٹی سے چند بلاکس کے فاصلے پر براڈوے اور 113 ویں اسٹریٹ کے چوراہے پر ایک گھیرابندی کی ہے اور پولیس نوجوانوں کو یونیورسٹی میں اپنے دوستوں سے ملنے سے روک رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہیلمٹ پہنے ہوئے اور لاٹھیوں سے لیس پولیس اہلکاروں کو علاقے میں تعینات کیا گیا اور لوہے کی بیری کیڈنگ کی گئی تھی ۔ اب تک کوئی تصادم نہیں ہوا۔ لوگ گھیرابندی کے اردگرد جمع ہو گئے اور ” ویوا فلسطین ” کے نعرے لگا رہے تھے۔

دریں اثنا، امریکن ایسوسی ایشن آف یونیورسٹی پروفیسرز کے کولمبیا یونیورسٹی چیپٹر نے ایک ریلیز میں کہا ہے کہ این وائی پی ڈی "کولمبیا یونیورسٹی کے دروازوں کے باہر بیریکیڈ والی سڑکوں پر جمع ہو رہا ہے” اور "ہماری پوری کمیونٹی کو خطرے میں ڈال رہا ہے۔”

غزہ میں اسرائیل کی کارروائیوں کے لیے امریکی فوجی، مالی اور سفارتی حمایت کے خلاف حالیہ دنوں میں امریکی کالج کیمپس میں کئی فلسطینی حامی مظاہرے سامنے آئے ہیں۔ غزہ میں اسرائیلی فوجی کارروائیوں کے نتیجے میں 34 ہزار سے زائد فلسطینی شہید اور 77 ہزار سے زائد زخمی ہو چکے ہیں۔

طلباء اپنی یونیورسٹیوں سے مطالبہ کر رہے ہیں کہ وہ غزہ میں اسرائیل کی امریکی حمایت یافتہ فوجی مہم کی مذمت کریں اور دیگر مطالبات کے علاوہ اسرائیلی یونیورسٹیوں میں بیرون ملک تعلیم کے پروگرام بند کر دیں۔