آندھراپردیش

چندرابابو کو الرجی، جیل میں معائنوں کے بعد رپورٹ پیش کی گئی

چندرابابو کے لئے ڈاکٹروں نے پانچ قسم کی دوائیوں کی سفارش کی ہے۔ سرکاری ڈاکٹروں کی رپورٹ کے مطابق چندرا بابو کے نجی ڈاکٹروں نے واضح کیا ہے کہ چندرا بابو کو صحت کے سنگین مسائل ہیں۔

حیدرآباد:اسکل ڈیولپمنٹ اسکام میں گرفتار، آندھراپردیش کیمشرقی گوداوری ضلع کی راجہ مہیندراورم سنٹرل جیل میں محروس تلگودیشم کے سربراہ و اے پی کے سابق وزیراعلی چندرابابو کی صحت کے بارے میں سرکاری اسپتال کے ڈاکٹروں کی اہم رپورٹ سامنے آئی ہے۔

متعلقہ خبریں
خود ساختہ فائنانس ڈپارٹمنٹ کا ایڈیشنل سکریٹری گرفتار
اسکام میں نائیڈو اصل ملزم: سی آئی ڈی
سعودی عرب میں لڑکی سے غیر اخلاقی حرکت پر ہندوستانی شہری گرفتار
خودساختہ ڈاکٹر گرفتار۔ 2 سل فونس، میڈیکل اشیاء ضبط
تحصیلدار رشوت قبول کرتے ہوئے گرفتار

 ڈاکٹروں نے تصدیق کی ہے کہ انہیں جلد کی الرجی ہے۔ اس مہینے کی 12 تاریخ کو شام 4 بجے جی جی ایچ کے سپرنٹنڈنٹ سے موصولہ ہدایت کے مطابق، اسی دن شام 5 بجے، جی سوری نارائنا، وی سنیتا دیوی سمیت ڈاکٹروں کی ایک ٹیم نے جیل حکام کو رپورٹ پیش کی۔

 چندرابابو کے لئے ڈاکٹروں نے پانچ قسم کی دوائیوں کی سفارش کی ہے۔ سرکاری ڈاکٹروں کی رپورٹ کے مطابق چندرا بابو کے نجی ڈاکٹروں نے واضح کیا ہے کہ چندرا بابو کو صحت کے سنگین مسائل ہیں۔

 ان کے رشتہ داروں نے باراضگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ جیل حکام ڈاکٹر کی رپورٹ کو ظاہر کئے بغیر کہہ رہے ہیں کہ اب تک سب کچھ ٹھیک ہے۔ چندرا بابوکچھ دنوں سے پانی کی کمی کا شکار ہیں۔

 چندرا بابو کے ارکان خاندان نے ناراضگی کااظہار کرتے ہوئے کہاکہ سرکاری عہدیدارچندرا بابو کی صحت کے مسائل کو معمولی سمجھ رہے ہیں۔ ڈاکٹروں کی تازہ رپورٹ سے چندرابابوکے ارکان خاندان اور پارٹی لیڈروں میں تشویش بڑھ گئی ہے۔

a3w
a3w