تلنگانہ

جھوٹے وعدوں کے سہارے کانگریس کواقتدار ملا

بی آر ایس کے کارگزار صدر کے تارک راما راؤ نے کہاکہ کانگریس قائدین نے عوام سے جھوٹے وعدے کرتے ہوئے اقتدار حاصل کیاہے۔

حیدرآباد: بی آر ایس کے کارگزار صدر کے تارک راما راؤ نے کہاکہ کانگریس قائدین نے عوام سے جھوٹے وعدے کرتے ہوئے اقتدار حاصل کیاہے۔

متعلقہ خبریں
نائیڈو کو 7 منڈل واپس کرنے کے لئے راضی کریں:ہریش راؤ
منی پور کا مسئلہ پارلیمنٹ میں پوری طاقت سے اٹھایا جائے گا: راہول گاندھی
جمعہ کی نماز اسلام کی اجتماعیت کا عظیم الشان اظہار ہے: مولانا حافظ پیر شبیر احمد
حکومت کی ویب سائٹس پر ڈیجیٹل مواد کی تباہی پر تشویش کا اظہار : کے ٹی آر
تلنگانہ میں کانگریس کو 10 نشستیں ملیں گی، چیف منسٹر پرامید

انہوں نے حکومت کوانتباہ دیا کہ اگر وعدوں پرعدم عمل آوری پرحکومت کے خلاف احتجاجی پروگرام منظم کئے جائیں گئے۔ کے تارک راما راؤ حلقہ اسمبلی سرسلہ کے قائدین اور کارکنوں کے اجلاس سے خطاب کررہے تھے۔

انہوں نے کہاکہ کانگریس قائدین نے اقتدار پرآنے کے فوری بعدکسانوں کا 2لاکھ قرض معاف کرنے دیگر وعدے کئے تھے مگر اب تک انہوں نے ان وعدوں پرعمل نہیں کیا۔

انہوں نے کہاکہ کانگریس کے اقتدار پرفائزہونے کے بعد چندیوم میں برقی کٹوتی کا سلسلہ دوبارہ شروع کردیا گیا۔انہوں نے دعویٰ کیا کہ سابق چیف منسٹر کے سی آر کی کامیاب تحریک کے باعث علحدہ تلنگانہ کاقیام عمل میں آیا۔

انہوں نے سوال کیا کہ آیا کے سی آر علحدہ تلنگانہ کے قیام کے لئے تحریک نہ چلاتے توکیا ریونت ریڈی ریاست کے چیف منسٹر اوربھٹی وکرامارکہ ڈپٹی چیف منسٹر کے عہدے پر فائز ہوتے؟ انہوں نے کہاکہ بسوں میں خواتین کومفت سفر کی سہولت فراہم کرتے ہوئے حکومت نے غریب آٹوڈرائیورس کی زندگیوں کے مسائل میں اضافہ کردیا۔حکومت ان کے مسائل حل کرنے پر کوئی توجہ نہیں دے رہی ہے۔

انہوں نے کہاکہ آئندہ لوک سبھا کے انتخابات میں بی آر ایس کوشکست دینے کے لئے کانگریس اور بی جے پی میں مفاہمت ہوئی ہے۔جن حلقوں میں کانگریس کمزور ہے وہاں بی جے پی‘کانگریس کی خفیہ تائیدکرے گی۔

a3w
a3w