دہلی

راہول گاندھی ”نقلی ہندو“:اندریش کمار

فلم’دی کشمیر فائیلس‘کے بارے میں سنگھ کے لیڈر نے کہاکہ اس فلم کو دنیاکے سب سے بڑے فلمی ایوارڈ”آسکر“کیلئے منتخب کیاگیا ہے اور کہاکہ یہ ایک سچی کہانی ہے۔

نئی دہلی: آرایس ایس لیڈر اورمسلم راشٹریہ منچ کے سرپرست اندریش کمارنے آج راہول گاندھی کو”نقلی ہندو“ قراردیا اوردعویٰ کیاکہ انہیں تہذیب و تمدن کے بارے میں کوئی علم نہیں۔ انہوں نے الزام عائد کیاکہ بہت زیادہ بات کرناراہول گاندھی کی عادت بن چکی ہے اور ان سے اپیل کی کہ وہ ایسے رویہ سے گریزکریں۔

متعلقہ خبریں
کسانوں کے قرض معافی، عثمان الہاجری کا دورہ گڈی ملکاپور ترکاری مارکٹ، کاشتکاروں سے ملاقات و شال پوشی
الیکٹورل بانڈس ایک تجربہ، وقت ہی بتائے گا کس قدر فائدہ مندہے: جنرل سکریٹری آر ایس ایس
منی پور کا مسئلہ پارلیمنٹ میں پوری طاقت سے اٹھایا جائے گا: راہول گاندھی
میں آسام کے سیلاب زدگان کے ساتھ کھڑا ہوں:قائد اپوزیشن
راہل نے خط لکھ کر مرمو سے اگنی ویر اسکیم میں مداخلت کرنے کا مطالبہ کیا

ان کے مطابق اسی رویہ کی وجہ سے ملک کے عوام نے انہیں مسترد کردیا ہے۔ یہاں موتیاخان علاقہ میں کمبلوں کی تقسیم کے ایک بڑے پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے راہول گاندھی کی بھارت جوڑو یاترا پر بھی تنقید کی۔ اس پروگرام کا اہتمام راشٹریہ منچ نے کیاتھا۔

 فلم’دی کشمیر فائیلس‘کے بارے میں سنگھ کے لیڈر نے کہاکہ اس فلم کو دنیاکے سب سے بڑے فلمی ایوارڈ”آسکر“کیلئے منتخب کیاگیا ہے اور کہاکہ یہ ایک سچی کہانی ہے۔

انہوں نے دعویٰ کیاکہ وہ اس وقت ان واقعات کے شاہد رہے ہیں۔ انہوں نے ہمیشہ یہ چیزیں اٹھائی ہیں لیکن کانگریس اور سیکولر جماعتوں نے انہیں کبھی قبول نہیں کیا۔

انہوں نے کہاکہ منچ تقریباًڈھائی لاکھ افراد میں بلانکٹس تقسیم کرے گا۔ دہلی میں 10 ہزارکمبل تقسیم کئے جائیں گے جن کے منجملہ ساڑھے چار ہزار ابھی تک تقسیم کئے جاچکے ہیں۔

a3w
a3w