بھارتسوشیل میڈیا

شیزان کو تنیشا کیس میں پھنسایا جارہا ہے

علی بابا: داستانِ کابل میں کام کرنے والی 21 سالہ تنیشا شرما 24 دسمبر کو پال گھر میں وسئی کے قریب ٹی وی سیرئیل کے سٹ پر واش روم میں مردہ پائی گئی تھی۔ 25 دسمبر کو شیزان خان کو اس الزام میں گرفتار کرلیا گیا تھا کہ اُس نے تنیشا کو خودکشی کے لیے مجبور کیا۔

ممبئی: اداکار شیزان خان کے ارکانِ خاندان نے پیر کے دن دعویٰ کیا کہ اُسے اس کی ساتھی اداکارہ تنیشا شرما کی موت کے کیس میں اداکارہ کی ماں کی طرف سے غلط طور پر پھنسایا جارہا ہے۔

پریس کانفرنس سے خطاب میں شیزان کی ماں اور دو بہنوں نے کہا کہ تنیشا شرما اُن کی ”فیملی ممبر“ جیسی تھی۔ انھوں نے الزام عائد کیا کہ اداکارہ کی ماں اسے کام کے لیے مجبور کرتی تھی، حالانکہ تنیشا زندگی سے لطف اندوز ہونا چاہتی تھی۔

علی بابا: داستانِ کابل میں کام کرنے والی 21 سالہ تنیشا شرما 24 دسمبر کو پال گھر میں وسئی کے قریب ٹی وی سیرئیل کے سٹ پر واش روم میں مردہ پائی گئی تھی۔ 25 دسمبر کو شیزان خان کو اس الزام میں گرفتار کرلیا گیا تھا کہ اُس نے تنیشا کو خودکشی کے لیے مجبور کیا۔

تنیشا شرما کی ماں ونیتا شرما نے گزشتہ ہفتہ کہا تھا کہ تنیشا کی موت قتل کیس ہوسکتی ہے۔ اُس نے شیزان اور اُس کی فیملی پر الزام عائد کیا تھا کہ یہ لوگ تنیشا کو تبدیلی ئ مذہب کے لیے مجبور کررہے تھے۔ اس نے یہ بھی دعویٰ کیا تھا کہ تنیشا نے شیزان کا موبائل فون چیک کیا تھا، جس میں اسے دوسری عورتوں کے ساتھ اس کے واٹس ایپ چیاٹس ملے تھے۔

تنیشا کا شیزان سے حال میں بریک اپ ہوا تھا۔ شیزان خان کی بہن فلک ناز نے جو خود بھی اداکارہ ہے، پیر کے دن الزامات کی تردید کی اور کہا کہ ہم تنیشا کو تکلیف دے ہی نہیں سکتے، کیوں کہ وہ ہماری فیملی ممبر جیسی تھی۔ فلک ناز نے کہا کہ تنیشا اور اس کی ماں کئی مرتبہ ان کے گھر آیا کرتے تھے۔

ہم نے کسی کو بھی کسی چیز کے لیے مجبور نہیں کیا۔ شیزان کی ماں نے کہا کہ تنیشا کی ماں کو چاہیے کہ وہ الزامات کا ثبوت دے۔ اس الزام پر کہ شوٹنگ کے دوران شیزان نے ایک مرتبہ تنیشا کو تھپڑ مارا تھا، اداکار کی ماں نے پوچھا کہ ونیتا شرما نے ہم سے شکایت کیوں نہیں کی یا شیزان کو تھپڑ کیوں نہیں مارا۔

فلک ناز نے کہا کہ ہر کوئی جانتا ہے کہ تنیشا کی ماں اسے دن میں کتنی مرتبہ فون کرتی تھی۔ ہم بھی چاہتے ہیں کہ تنیشا سے انصاف ہو، لیکن اس کی ماں شیزان کو کیس میں غلط طریقہ سے پھنسانے کی کوشش کررہی ہے۔ یہ ٹھیک نہیں ہے۔ شیزان کی بہن نے کہا کہ ہم نے تنیشا کو 4 جنوری کو اس کی برتھ ڈے پر سرپرائز دینے کا فیصلہ کیا تھا۔

یہ بات تنیشا کی ماں کو اچھی طرح معلوم ہے۔ وہ ہماری چھوٹی بہن جیسی تھی۔ ہم نے اس کے ساتھ 6 ماہ گزارے تھے۔ اسے ہماری کمپنی میں مزہ آتا تھا۔ تنیشا کو حجاب اور درگاہ کی زیارت کے لیے مجبور کرنے کے الزام پر فلک ناز نے کہا کہ ہم نے اس سے ایسا کبھی نہیں کہا۔

سوشل میڈیا پر تنیشا کی حجاب میں لی گئی تصویر وائرل ہونے کے بارے میں پوچھنے پر شیزان خان کی دوسری بہن نے دعویٰ کیا کہ یہ ہیڈ کور اس نے شوٹنگ کے دوران پہنا تھا۔ ہم صرف اتنا کہنا چاہتے ہیں کہ وہ ہماری فیملی ممبر جیسی تھی اور ہم اس کا اچھی طرح خیال رکھتے تھے۔

a3w
a3w