تلنگانہ

بریکنگ: تلنگانہ سرکاری ملازمین کے لئے پی آر سی کا اعلان، 5 فیصد کی فوری عبوری راحت

ریاست کی چیف سکریٹری شانتی کماری نے ریٹائرڈ آئی اے ایس آفیسر این شیوا شنکر کو پی آر سی چیئرمین اور ایک اور ریٹائرڈ آئی اے ایس آفیسر بی رامیا کو کمیٹی کا رکن مقرر کرتے ہوئے احکامات جاری کردیئے ہیں۔

حیدرآباد: چیف منسٹر تلنگانہ کے چندر شیکھر راؤ نے پیر کے روز ریاست کے سرکاری ملازمین کے نئے پے اسکیل کے لئے سفارشات پیش کرنے پے ریویژن کمیشن (پی آر سی) کی تشکیل کا اعلان کیا ہے۔

متعلقہ خبریں
تلنگانہ ہائی کورٹ میں تحقیقاتی کمیشن کو غیر قانونی قرار دینے کی درخواست مسترد
تلنگانہ و اے پی کے وزرائے اعلیٰ کی ملاقات ۔ شاگرد، استاد کی ملاقات نہیں: بھٹی وکرامارکہ
کانگریس اور بی جے پی کے گمراہ کن وعدوں کے جھانسہ میں نہ آئیں۔ کے سی آر
تلنگانہ کے مختلف 35 کارپوریشن کے صدورنشین کا تقرر
بی آر ایس کی 16نیوز چانلس کے خلاف شکایت

ریاست کی چیف سکریٹری شانتی کماری نے ریٹائرڈ آئی اے ایس آفیسر این شیوا شنکر کو پی آر سی چیئرمین اور ایک اور ریٹائرڈ آئی اے ایس آفیسر بی رامیا کو کمیٹی کا رکن مقرر کرتے ہوئے احکامات جاری کردیئے ہیں۔

احکامات میں تجویز دی گئی کہ پی آر سی 6 ماہ کے اندر رپورٹ حکومت کو پیش کرے۔ دوسری طرف ریاستی محکمہ خزانہ سے کہا گیا ہے کہ وہ پی آر سی کے کام کے لئے مطلوبہ فنڈز اور عملہ فراہم کرے۔

دریں اثناء حکومت نے ریاستی سرکاری ملازمین کو 5 فیصد عبوری راحت ادا کرنے کا بھی فیصلہ کیا ہے۔

یہ فیصلے اس گونج کے درمیان آئے ہیں کہ الیکشن کمیشن آف انڈیا (ای سی آئی) آئندہ چند دنوں میں تلنگانہ میں اسمبلی انتخابات کے شیڈول کا اعلان کر سکتا ہے۔

انتخابات نومبر یا دسمبر میں ہونے کا امکان ہے جبکہ انتخابی تیاریوں کا جائزہ لینے کے لئے الیکشن کمیشن کی ایک ٹیم منگل کو تلنگانہ کا تین روزہ دورہ شروع کر رہی ہے۔

a3w
a3w