تلنگانہصحت

ملک میں روزانہ چار ہزار افراد کی اچانک دل کا دورہ پڑنے سے موت ہورہی ہے

بدلتی ہوئی غذائی عادات کی وجہ سے اچانک دل کا دورہ پڑنے کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے اور کورونا کے بعد یہ زیادہ ہو رہے ہیں۔

حیدرآباد: تلنگانہ کے وزیر صحت ہریش راؤ نے کہا ہے کہ ملک میں ہر روز چار ہزار افراد کی اچانک دل کا دورہ پڑنے سے موت ہورہی ہے۔

متعلقہ خبریں
میڈیکل کالجوں میں تلنگانہ طلبہ کے صدفیصد داخلوں کو یقینی بنایا جائے: ہریش راؤ
میاچ کے دوران دل کا دورہ پڑنے سے کرکٹر کی موت
کے سی آر کٹر ہندو: ہریش راو
”میرا تیسرا جنم ہوا ہے“ ایچ ڈی کمارا سوامی کا بیان
کنٹراکٹ کے 19 یونانی میڈیکل آفیسرس کوحکومت نے مستقل کردیا

وزیر موصوف نے سنگاریڈی کلکٹریٹ میں منعقدہ سی پی آر ٹریننگ پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دل کے دورہ کے بعد کئے جانے والے سی پی آر سے صرف 2 فیصد افراد ہی واقف ہیں اور 98 فیصد افراداس سے واقف نہیں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اس سلسلہ میں بیداری کی ضرورت ہے۔ اس کی تربیت حاصل کرنے والوں کو اضلاع بھیجا جا رہا ہے۔ تمام محکموں کے عملے کو سی پی آرکی تربیت دی جا رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت نے ریاست میں 1500 کروڑ روپے کی لاگت سے 1200 اے ای ڈی مشینیں خریدنے کا فیصلہ کیا ہے۔

بدلتی ہوئی غذائی عادات کی وجہ سے اچانک دل کا دورہ پڑنے کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے اور کورونا کے بعد یہ زیادہ ہو رہے ہیں۔

وزیر نے کہا کہ عوامی نمائندوں اور سرکاری ملازمین کو بھی سی پی آر سے آگاہ ہونا چاہئے۔

a3w
a3w