شمالی بھارت

سپریم کورٹ میں جمعہ کو گیان واپی تنازعہ کی سماعت

چیف جسٹس ڈی وائی چندر چوڑ کی سربراہی والی بنچ نے ’’خصوصی تذکرہ‘‘ کے دوران وکیل وشنو شنکر جین کی عرضی کو قبول کرتے ہوئے کہا کہ اس معاملے کی سماعت جمعہ کو سہ پہر 3 بجے ہوگی۔

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے جمعرات کو کہا کہ وہ وارانسی کی گیان واپی مسجد میں’’شیولنگ‘‘ ہونے کا دعویٰ کئے جانے کے بعد اس کے احاطہ کی حفاظت پر جاری کردہ عبوری حکم میں توسیع کرنے یا نہ کرنے کے لئے کل جمعہ کو سماعت کرے گی۔

چیف جسٹس ڈی وائی چندر چوڑ کی سربراہی والی بنچ نے ’’خصوصی تذکرہ‘‘ کے دوران وکیل وشنو شنکر جین کی عرضی کو قبول کرتے ہوئے کہا کہ اس معاملے کی سماعت جمعہ کو سہ پہر 3 بجے ہوگی۔

بنچ کے سامنے ایڈوکیٹ مسٹرجین نے متعلقہ علاقے کی سیکورٹی سے متعلق عبوری حکم کے 12 نومبرکو ختم ہونے کی معلومات کا حوالہ دیتے ہوئے اس کی توسیع کی درخواست پر سماعت کرنے کی التجا کی تھی۔

چیف جسٹس چندر چوڑ نے کہا، ’’ہمیں ایک بنچ تشکیل دینا ہے۔ ہم کل سہ پہر تین بجے سماعت کے لئے ایک بنچ تشکیل دیں گے۔‘‘

سپریم کورٹ نے اترپردیش کے وارانسی میں گیان واپی مسجد کے صحن میں’’’شیولنگ‘‘ ملنے کے دعویٰ کے بعد متعلقہ فریقوں کی درخواستوں پر سماعت کرتے ہوئے17 مئی کو اس متنازعہ علاقے کا تحفظ یقینی بنانے عبوری حکم جاری کیاتھا، جس کی مدت جمعہ کو ختم ہورہی ہے۔

a3w
a3w