حیدرآباد

گورنر کو زیر التوا بلز کی منظوری دینے کی ہدایت، سپریم کورٹ میں آئندہ ماہ سماعت

عدالت نے واضح کیاتھا کہ وہ دفتر گورنر کو نوٹس جاری نہیں کریں گے۔ تاہم وفاقی حکومت کو جواب داخل کرتا ہوا دیکھناچاہیں گے۔ علاوہ ازیں 14 مارچ کو سپریم کورٹ نے حکومت تلنگانہ کی جانب سے گورنر کو 10بلس کو منظوری دینے کی ہدایت جاری کرنے کے متعلق داخل کردہ عرضی پر سماعت کرنے سے اتفاق کیا تھا۔

حیدرآباد: سپریم کورٹ کی جانب سے حکومت تلنگانہ کی جانب سے گورنر کو زیر التواء 10بلز کو منظوری دینے کی ہدایت دینے کے لیے داخل کردہ عرضی پر 10 اپریل کو سماعت کرنے کافیصلہ کیاگیا۔

متعلقہ خبریں
تلنگانہ میں تنہا کامیابی حاصل کرنے بی جے پی کو شاں: ترون چگھ
پرگتی بھون اور راج بھون میں اختلافات برقرار
تلنگانہ ہائی کورٹ نے دانم ناگیندر کو نوٹس جاری کی
کویتا، پیش نہیں ہورہی ہیں سپریم کورٹ میں ای ڈی کا انکشاف
نیٹ یوجی تنازعہ، این ٹی اے کی تازہ درخواستوں پر کل سماعت

 سالیسیٹر جنرل آف انڈیا تشارمہتا نے چیف جسٹس ڈی وائی چندرا چوڈ اور جسٹس پی ایس نرسمہا اور جسٹس جے پی پاردی والا  کی بنچ کو بتایا کہ انہوں نے گورنر سے گفت وشنید کی ہے اور آئندہ سماعت کے دوران بیان دیں گے۔

آج مقدمہ پر سماعت کے دوران حکومت تلنگانہ کی طرف سے مباحث میں حصہ لیتے ہوئے سینئر ایڈوکیٹ دشینت داؤے نے کہاکہ مدھیہ پردیش میں صرف 7 دنوں میں گورنر کی جانب سے بلز کو منظوری دی جاتی ہے۔

گجرات میں ایک مہینہ میں بلس کو منظورکیا جاتاہے پھر تلنگانہ میں تاخیر کیوں ہورہی ہے۔ میں سالیسٹر جنرل سے مداخلت کرنے کی اپیل کرو ں گا وہ گورنر سے بات کریں۔ ایسا تاخیر کرنے سے کیا حاصل ہوگا۔ عدالت کیوں نہیں کہہ سکتی کہ گورنر بلس کی منظوری میں تاخیر نہیں کرسکتی۔

 رابطہ کا فقدان ہے۔ دستوری بنچس کے دو فیصلوں کے مطابق گورنر کو کابینہ کی تجاویز ماننا ہوگا۔ ایسا نہ کرنا غلط اشارے دے گا۔ تشار مہتا نے کہاکہ گورنر سے رابطہ کیاگیا تاہم تفصیلات بتانے سے گریز کیا۔ میں مزید ہدایت حاصل کرتے ہوئے آئندہ سماعت کے دوران کچھ اعلان کرو ں گا۔

 داؤے نے کہاکہ عدالت کو جاننا چاہئے کہ ریاست کے عوام بلس کی منظوری کے منتظر ہیں۔ عدالت نے مقدمہ کی سماعت کو 10اپریل تک ملتوی کردیا۔ واضح رہے کہ 20 مارچ کو عدالت نے ریاستی حکومت کی جانب سے دائر کردہ مقدمہ پر مرکز کی رائے طلب کی تھی۔

عدالت نے واضح کیاتھا کہ وہ دفتر گورنر کو نوٹس جاری نہیں کریں گے۔ تاہم وفاقی حکومت کو جواب داخل کرتا ہوا دیکھناچاہیں گے۔ علاوہ ازیں 14 مارچ کو سپریم کورٹ نے حکومت تلنگانہ کی جانب سے گورنر کو 10بلس کو منظوری دینے کی ہدایت جاری کرنے کے متعلق داخل کردہ عرضی پر سماعت کرنے سے اتفاق کیا تھا۔

a3w
a3w