شمالی بھارت
ٹرینڈنگ

استاد کی بوتل سے پانی پینے پر دلت طالبعلم کی پٹائی

دلت تنظیموں کا کہنا ہے کہ ملزم استاد اب بھی اپنی ڈیوٹی کر رہا ہے۔ وہ خود کو ایک پارٹی لیڈر کا بھانجا کہتا ہے۔ اس لیے ان کا مطالبہ ہے کہ استاد کو معطل کر کے گرفتار کیا جائے۔

حصار: ہریانہ کے ایک سرکاری اسکول میں ٹیچر کی بوتل سے پانی پینے پر ایک دلت طالب علم کی پٹائی کے معاملے میں دلت تنظیموں نے منگل کو ریاستی وزیر انوپ دھانک کے گھر کے باہر دھرنا دیا اور ملزم استاد کی گرفتاری کا مطالبہ کیا۔

متعلقہ خبریں
پوکسو کیس کا نابالغ ملزم، ہائی کور ٹ سے بری
ذات پات کی ہراسانی کی شکایت پر دلت بہن بھائی پر گھر کے اندر درانتیوں سے حملہ
چاکلیٹ دینے کے بہانے غلط حرکت پر ملزم گرفتار
لٹیرا گرفتار‘9.5 لاکھ روپئے برآمد جوبلی ہلزپولیس کی کاروائی

پولیس نے ٹیچر کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔ دلت تنظیموں کا کہنا ہے کہ ملزم استاد اب بھی اپنی ڈیوٹی کر رہا ہے۔ وہ خود کو ایک پارٹی لیڈر کا بھانجا کہتا ہے۔ اس لیے ان کا مطالبہ ہے کہ استاد کو معطل کر کے گرفتار کیا جائے۔

دوسری جانب احتجاجی مقام پر پہنچے تھانہ انچارج اشوک کمار نے بتایا کہ معاملے کی تحقیقات ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ آف پولیس کے پاس جاری ہے۔ تحقیقات مکمل ہونے کے بعد ہی پولیس کارروائی کرے گی۔ دوسری جانب دلت تنظیموں کا کہنا تھا کہ اگر پولیس نے ملزم استاد کو جلد گرفتار نہ کیا تو وہ کوئی بڑا فیصلہ لیں گے۔

a3w
a3w