دہلی

شردھا والکر کیس، آفتاب کے فلیٹ سے آلہ قتل برآمد

تحقیقاتی عہدیداروں نے وہ آلہ ئ قتل برآمد کرلیا ہے جس کے ذریعہ آفتاب امین پونا والا نے شردھا والکر کی نعش کے کئی ٹکڑے کئے تھے۔

نئی دہلی: تحقیقاتی عہدیداروں نے وہ آلہ ئ قتل برآمد کرلیا ہے جس کے ذریعہ آفتاب امین پونا والا نے شردھا والکر کی نعش کے کئی ٹکڑے کئے تھے۔ ذرائع نے پیر کے دن یہ بات بتائی۔

شردھا کی وہ انگوٹھی بھی مل گئی ہے جو آفتاب نے شردھا کو قتل کرنے کے بعد دوسری لڑکی کو بطور تحفہ دی تھی جسے اس نے اپنے فلیٹ میں بلایا تھا۔ 2 دن قبل تحقیقاتی عہدیداروں نے اس عورت سے رابطہ کیا۔

یہ عورت پیشہ کے لحاظ سے سائیکولوجسٹ (ماہر نفسیات) ہے۔ آفتاب نے اس عورت سے بھی ڈیٹنگ اپلیکیشن بمبل کے ذریعہ ملاقات کی تھی۔ یہ وہی ایپ ہے جس کے ذریعہ وہ شردھا سے ملا تھا۔ گزشتہ ہفتہ پولیس ٹیم نے آفتاب کے کرایہ کے مکان سے تیزدھاار والے 5 چاقو برآمد کئے۔

دہلی پولیس ٹیم چہارشنبہ کے دن چھترپور میں اس کے فلیٹ گئی تھی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ واضح نہیں کہ یہ چاقو شردھا کی نعش کے ٹکڑے کرنے میں استعمال ہوئے یا نہیں۔ انہیں فارنسک جانچ کے لئے بھیج دیا گیا۔ جمعہ کے دن آفتاب کا پولی گراف ٹسٹ ادھورا رہ گیا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ آج 50 تا 60 سوالات کئے گئے۔ہندی میں جب بھی کوئی سوال کیا جاتا‘ آفتاب انگریزی میں جواب دیتا ہے۔ پوچھ تاچھ کے دوران وہ پرسکون دکھائی دیتا ہے۔

a3w
a3w