یوروپ

سمندر میں دو ماہ تک بھٹکنے والے شخص اور اسکے کتے کو بچالیا گیا (ویڈیو)

میکسیکو کے ماہی گیروں کی ایک کشتی نے لگ بھگ دو ماہ تک سمندر میں بھٹکنے والے آسٹریلوی ملاح اور اس کے کتے کو بازیاب کرالیا ہے جو اس وقت بین الاقوامی سمندری حدود میں جا پہنچے تھے۔

سڈنی: میکسیکو کے ماہی گیروں کی ایک کشتی نے لگ بھگ دو ماہ تک سمندر میں بھٹکنے والے آسٹریلوی ملاح اور اس کے کتے کو بازیاب کرالیا ہے جو اس وقت بین الاقوامی سمندری حدود میں جا پہنچے تھے۔

54 سالہ ملاح ٹموتھی لِنڈسے شیڈوک سڈنی میں رہتے ہیں جو اپنے پالتو کتے (بیلا) کے ساتھ ایک ہموار بادبانی کشتی میں سوار تھے جسے ’کیٹاماران‘ کہا جاتا ہے۔

میکسیکو کی ٹیونا پکڑنے والی کشتی کے مالک نے بتایا کہ آسٹریلوی شخص اور اس کے کتے کو خشکی سے 1900 کلومیٹر دور دیکھا گیا ۔ اس وقت وہ بین الاقوامی سمندری حدود میں پہنچ چکے تھے۔

میکسیکو کی کمپنی کے مطابق آسٹریلوی ملاح اور اس کا ساتھی کتا دونوں ہی بہت بری حالت میں تھے۔ دونوں مچھلیوں کے کچے گوشت اور بارش کے جمع شدہ پانی پر زندہ تھے۔

ان کی کشتی طوفان کے بعد راہ بھٹک چکی تھی اور وہ بہت ہی نڈھال بھی تھے۔ سب سے بڑھ کر طوفان کی وجہ سے ان کی کشتی شکستہ حالت میں تھی۔

کشتی کا برقی نظام مکمل طور پر تباہ ہوچکا تھا اور وہ سمت دیکھنے اور آگے بڑھنے سے قاصر تھے۔کشتی کے عملے نے ٹموتھی اور اس کے کتے کو غذا، ادویہ، پانی اور دیگر اشیا فراہم کیں۔ لیکن اب بھی کمپنی کی جانب سے دیگرتفصیلات سامنے نہیں آسکی ہیں۔

a3w
a3w