شمالی بھارت

خاتون کا فحش ویڈیو‘ 4 افراد کے خلاف کیس درج

خاتون نے کوکھ راج پولیس اسٹیشن میں درج کرائی گئی اپنی شکایت میں یہ الزام لگایا ہے کہ ملزمین نے اسے ملازمت فراہم کرنے کے بہانے ایک اسکول میں طلب کیا اور نشیلی شئے ملاہوا مشروب دیا۔

کوشمبی (یو پی) : کوشمبی میں ایک خاتون نے 4 افراد پر انہیں بلیک میل کرنے اور سوشل میڈیا پر وائرل کیاگیا۔ اس کا ایک فحش ویڈیو تیار کرنے کا الزام لگایا۔

خاتون نے کوکھ راج پولیس اسٹیشن میں درج کرائی گئی اپنی شکایت میں یہ الزام لگایا ہے کہ ملزمین نے اسے ملازمت فراہم کرنے کے بہانے ایک اسکول میں طلب کیا اور نشیلی شئے ملاہوا مشروب دیا۔

پولیس نے کہاکہ یہ واقعہ 20 دن قبل رونما ہوا۔ خاتون نے مزید الزام لگایا کہ ایک کار میں اس کی عصمت ریزی کرنے کی کوشش بھی کی گئی۔

اڈیشنل سپرنٹنڈنٹ آف پولیس سمربہادرسنگھ نے کہاکہ جمعرات کے دن 4 افراد کے خلاف بلیک میل کرنے اور سوشل میڈیا پر ویڈیو پوسٹ کرنے کے الزام پرایک کیس درج رجسٹرڈ کیاگیا جن میں تین مرد اور ایک خاتون شامل ہے‘ یہ خاتون ایک ملزم کی بھتیجی ہے۔

متاثرہ خاتون نے اپنی شکایت میں کہاکہ 20 دن قبل مورت گنج سے تعلق رکھنے والے ایک ملزم نے اپنی بھتیجی کے توسط سے ایک اسکول میں ملازمت دلانے کے بہانے اسے طلب کیا۔ خاتون نے کہاکہ جب وہ مورت گنج پہنچی تو اسے نشیلی شئے ملایا گیا مشروب دیاگیا۔

متاثرہ خاتون نے اپنی شکایت میں کہاکہ جب اس کی حالت بگڑنا شروع ہوگئی تو ملزمین نے اسے گھر چھوڑنے کیلئے کار میں لے گئے۔ انہوں نے راستہ میں اس کا ایک فحش ویڈیو تیار کیا اور عصمت ریزی کی کوشش بھی کی۔ خاتون نے دعویٰ کیا کہ وہ کسی طرح بچ کر گھر پہنچنے میں کامیاب ہوگئی۔

جس کے بعد مورت گنج سے تعلق رکھنے والے ملزم نے اسے بلیک میل کرنا اور سوشل میڈیا پر ویڈیو گشت کرانے کی دھمکیاں دینا شروع کیا۔ خاتون نے کہاکہ جب اس نے ملزم کی بات نہیں سنی تو اس نے سوشل میڈیا پر ویڈیو پوسٹ کردیا۔ سنگھ نے کہاکہ معاملہ کی تحیقیقات کی جارہی ہے اور ثبوت کی بنیاد پر کارروائی کی جائے گی۔

a3w
a3w